جمعرات, اپریل 30, 2015

پکڑے جاتے ہیں''بلاگرز '' کے لکھے پہ ناحق

0 comments



چندروز قبل ایک ''بلاگستانی''بزرگ کو خواب میں دکھایا گیا کہ جو لوگ خود بلاگ لکھتے ہیں مگر دوسروں کے لکھے گئے بلاگ نہیں پڑھتے  تو روز قیامت نظر انداز کیے گئے تمام بلاگ لوہے کی بھاری تختیوں پہ لکھ کر انکے گلے میں ڈالے جائیں گے۔پھر وہ اونچی آواز میں لوگوں کو سناتے پھریں گے جسکا انہیں اس وقت کوئی فائدہ نہیں ہوگا۔
عزیزان من میں نہیں چاہتا کہ آپ سب میرے وجہ سے اس کیفیت سے گزریں۔لٰہذا آپ سب لوگ آج ہی نہ صرف میرے تمام بلاگز لفظ بہ لفظ غور سے پڑھیں ، کمنٹس کریں بلکہ بلاگ  کے ممبر بنیں۔اگر دوسروں کا بھی مطلع کریں گے تو قیامت کے دن میں اسکی گواہی دوں گا۔  باقی بخشش صرف اللہ کے 
ہاتھ میں ہے۔ 
میرے بلاگ ''نقش فریادی'' کا ایڈریس نوٹ فرما لیں۔۔


نقش فریادی کے فیس بک کے پیج کا ایڈریس بھی  درج ذیل ہے۔


آپکا خیر اندیش و     دور اندیش۔۔ 
                                                                                                                                                                                                                                                                       
                                                                                                                                     سید عاصم علی شاہ    


0 comments: